اہم خبریںپاکستان

انتخابات میں ایک دن کی بھی تاخیر برداشت نہیں ہوگی :وزیراعظم

اسلام آباد:وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے پاکستان کے مسائل کے حل کےلئے سول مذاکرات کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہاہے کہ انتخابات میں ایک دن کی بھی تاخیر برداشت نہیں ہوگی 2013 کے مقابلے میں ملک کی معیشت بہت بہتر ہے دوسری اسمبلی اپنی مدت پوری کررہے ہیں جو خوش آئند ہے ¾ پانچ سالہ دور میں جمہوریت پر بہت سے حملے ہوئے‘ اسمبلی توڑنے کی پیش گوئیاں ہوئیں‘ اخبارات بھرے ہوتے تھے۔
خورشید شاہ نے ہمیشہ اسمبلی کی مدت پوری ہونے کی بات کی ¾ ہماری افواج نے دنیا کو امن دیا ¾ہم نے ٹیکس ریفارمز کیں‘ اس کو آگے بڑھایا جائے اس سے مالیاتی استحکام آئے گا اور ریونیو بڑھے گا ¾مغربی راہداری بلوچستان تک رسائی کا ذریعہ ہوگی۔
ان منصوبوں سے پاکستان کے لوگ متحد ہوں گے‘ مال برداری کی تجارت کو فروغ ملے گا پالیسیوں کو سیاسی تبدیلیوں سے آزاد ہونا چاہیے ¾اگر ایسا ہوگا تو ملک ترقی کرےگا۔
جمعرات کو قومی اسمبلی کے آخری روز الوداعی خطاب میں وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ آج جب یہ اسمبلی اپنی مدت پوری کر رہی ہے سپیکر کا شکریہ ادا کرتا ہوں جس طرح انہوں نے ایوان کو چلایا‘ غیر جانبداری کے نئے معیارات قائم کئے‘ جس طرح سب کو اکٹھا رکھا‘ کسی کو یہ محسوس نہیں ہونے دیا کہ کوئی کمی رہ گئی ہے‘ اتفاق رائے کےلئے سپیکر کوشاں رہے‘ سپیکر نے کوشش کی کہ اپوزیشن محسوس نہ کرے کہ وہ جانبدار رہے‘ پہلے کے سپیکرز کی روایات کو موجودہ سپیکر نے مزید آگے بڑھایا۔ سپیکر کے عمل پر ان کے مشکور ہیں۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close