اہم خبریںپاکستان

مستونگ میں خودکش حملہ، سراج رئیسانی سمیت128افراد شہید

سراج رئیسانی کو زخمی حالت میں علاج کے لیے کوئٹہ منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسے

مستونگ /بنوں: بلوچستان کے علاقے مستونگ اور کے پی کے کے شہربنوںمیں خود کش حملوں میں مجموعی طور پر 128افراد شہید اور 120سے زائد افراد زخمی ہو گئے ۔ تفصیلات کے مطابق مستونگ میںانتخابی مہم کے دوران خودکش دھماکے میں بلوچستان عوامی پارٹی کے امیدوار نوابزادہ سراج رئیسانی سمیت 128 افراد شہید اور 120 سے زائد زخمی ہوگئے۔

لیویز ذرائع کے مطابق مستونگ کے علاقے درینگڑھ میں بلوچستان عوامی پارٹی کے امیدوار سراج رئیسانی کی انتخابی مہم کے دوران خودکش حملہ آ ور نے خود کو دھماکے سے اڑا دیا جس کے نتیجے میں128 افراد شہید اور 120 سے زائد زخمی ہوگئے۔ڈپٹی کمشنر مستونگ اور نگران صوبائی وزیر صحت نے واقعے میں 70 افراد کے جاں بحق ہونے کی تصدیق کی ہے جب کہ نوابزادہ لشکری رئیسانی نے بھائی سراج رئیسانی کی شہادت کی تصدیق کردی ہے۔

ڈپٹی کمشنر مستونگ کے مطابق سراج رئیسانی کو زخمی حالت میں علاج کے لیے کوئٹہ منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسے۔مستونگ دھماکے کے بعد کوئٹہ کے سرکاری اسپتالوں میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی۔بنوں میں متحدہ مجلس عمل کے امیدوار اکرم خان درانی کے قافلے کے قریب بم دھماکے کے نتیجے میں 4 افراد جاں بحق اور 10 سے زائد زخمی ہوگئے۔پولیس کے مطابق دھماکا بنوں کے مضافاتی علاقے حوید میں ہوا، جب اکرم خان درانی کا قافلہ انتخابی جلسے میں شرکت کے بعد واپس جا رہا تھا۔واقعے میں پولیس اہلکاروں سمیت 13 سے 14 افراد زخمی ہوئے، جنہیں طبی امداد کے لیے ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرز اسپتال بنوں منتقل کردیا گیا۔اکرم خان درانی نے مزید کہا کہ ہمیں کبھی سازگار حالات نہیں ملے، ہم نے جمہوریت کے لیے جدوجہد اور کشمکش میں زندگی گزاری ہے۔

 

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close