صحت

سفید پلاسٹک کے ڈسپوزیبل کپ کینسر کا موجب بن رہے ہیں، ماہرین

سٹائیروفوم مصنوعات کا استعمال انسانی صحت کیلئے مسائل پیدا کرتا ہے ، جن میں سرفہرست کینسر ہے ،رپورٹ

کراچی:سفید پلاسٹک سے بنے ڈسپوزیبل کپ کینسر کا موجب بن رہے ہیں ، ماہرین کے اس انکشاف کے بعد دنیا کے بیشتر ممالک میں اسٹائیروفوم مصنوعات پر پابندی عائد کی جارہی ہے۔دنیا بھر میں چائے ، کافی وغیرہ پینے کیلئے خاص قسم کے گلاس استعمال ہوتے ہیں ، جنہیں اسٹائیروفوم سے بنایا جاتا ، اس کی خصوصیت یہ ہے کہ یہ ہر درجہ حرارت برداشت کرلیتا ہے جبکہ اس میں مائع اشیاءبھی زیادہ دیر تک رکھی جاسکتی ہیں ۔
تاہم نئی تحقیق نے اسٹائیروفوم کے حوالے سے تحفظات قائم کردیئے ہیں ، بیشتر ممالک میں اس کے استعمال پر پابندی عائد کردی گئی ہے ۔اسٹائیروفوم مصنوعات کا استعمال انسانی صحت کیلئے مسائل پیدا کرتا ہے ، جن میں سرفہرست کینسر ہے ۔ ماہرین نے حاملہ خواتین اور بچوں کو ایسے برتنوں کی بجائے سیرامک استعمال کرنے کا مشورہ دیا ہے ۔اسٹائیروفوم مصنوعات کو استعمال کے بعد تلف کرنا بھی بے حد مشکل کام ہے ، انھیں پوری طرح تحلیل کرنے میں طویل عرصہ لگتا ہے ، جس کی وجہ سے اگلے کچھ سال تک سمندر میں مچھلیوں سے زیادہ تعداد ان استعمال شدہ کپس کی ہوگی۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close