اہم خبریںپاکستان

یوسف رضاگیلانی سے سیکیورٹی واپس لینا مجرمانہ فعل ہے،بلاول

کیا ہارون بلور اور سراج رئیسانی کی شہادتیں لمحہ فکریہ نہیں ہیں، کیا حکومت کو معلوم نہیں ہے کہ یوسف رضا گیلانی اور ان کا خاندان دہشت گردوں کے نشانے پر ہے، چیئرمین پیپلزپارٹی

کراچی:پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے سابق وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی کی سکیورٹی واپس لیئے جانے پر شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہاہے کہ کیا ہارون بلور اور سراج رئیسانی کی شہادتیں لمحہ فکریہ نہیں ہیں۔سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی سے سیکیورٹی واپس لیناصریحاًمجرمانہ فعل ہے۔ انہوں نے حکومت سے سوال کیا ہے کہ یوسف رضا گیلانی کی سیکیورٹی ہٹا کر کس کے لیے آسانیاں پیدا کی جارہی ہیں؟۔اتوارکو جاری اپنے بیان میں بلاول بھٹو زرداری نے کہاکہ کیا حکومت کو معلوم نہیں ہے کہ یوسف رضا گیلانی اور ان کا خاندان دہشت گردوں کے نشانے پر ہے۔
انہوں نے کہا کہ اسی طرح کے مجرمانہ عمل کے باعث علی حیدر گیلانی اور شہباز تاثیر دہشت گردوں کے ہاتھوں یرغمال ہوئے تھے۔انہوں نے مطالبہ کیاکہ تحریری ضمانت دی جائے کہ گیلانی فیملی کو کچھ ہوا تو اس کی ذمہ دار حکومت ہوگی۔ انہوں نے کہاکہ عوام کو یہ بھی بتایا جائے کہ سیاسی قیادت کی سیکیورٹی ہٹانے کا فیصلہ کس نے اور کون سے اجلاس میں کیا؟۔چیئرمین پی پی پی نے سوال کیا کہ کیا آنے والے ان حکمرانوں کی خواہش پر ایسا کیا جارہا ہے جنہوں نے دہشت گردوں کو بھائی کہا اور سرکاری خزانے سے کروڑوں روپے دیئے۔بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ کیا ھارون بلور اور سراج رئیسانی کی حالیہ شہادتیں لمحہ فکریہ نہیں ہیں؟ انہوں نے سابق وزیراعظم سید یوسف رضا گیلانی سمیت تمام سیاسی قیادت کے تحفظ کو یقینی بنانے کا مطالبہ کیا۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close