اہم خبریںپاکستان

aقائد ایوان کا انتخاب، (ن)لیگی اراکین کا عمران خان کی نشست کا گھیراﺅ ،شدید نعرے بازی، ایوان مچھلی منڈی بن گیا

ایوان میںجعلی مینڈیٹ نا منظور، ووٹ کو عزت دو، نہ بکنے والا ، نہ جھکنے والا نوازشریف کے نعرے ، پی ٹی آئی ارکان کی جوابی نعرے بازی

اسلام آباد :قومی اسمبلی میں قائد ایوان کے امیدوار پاکستان تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان کی کامیابی کا اعلان ہوتے ہی مسلم لیگ (ن)کے اراکین نے عمران خان کی نشست کے سامنے آکر شدید نعرے بازی شروع کر دی جس پر تحریک انصاف کے اراکین نے جوابی نعرے لگائے اور عمران خان کے سامنے سے لیگی اراکین کو ہٹانے کی کوشش کرتے رہے،سپیکر قومی اسمبلی تمام صورتحال کے دور ان گیلری میں لیگی کارکنوں اور ایوان میں موجود لیگی اراکین کوروکنے کوشش کرتے رہے لیکن اپوزیشن اراکین نے ایک نہ سنی  ایوان ووٹ کو عزت دو، جعلی نا منظور کے نعروں سے گونج اٹھا، لیگی اراکین کی شدید نعرے بازی کے دور ان عمران خان ہاتھ میں تسبیح لئے مسلسل مسکراتے رہے، پاکستان پیپلز پارٹی کے اراکین مسلم لیگ (ن) کے احتجاج کے دوران خاموش رہے، صورتحال کنٹرول نہ ہوئی تو بلاول بھٹو زر داری اور پی پی کے کئی اراکین ایوان سے باہر چلے گئے، پی ٹی آئی رہنما سابق وزیر اعلیٰ پرویز خٹک کے (ن)لیگ کے صدر شہباز شریف اور اراکین سے خاموش رہنے کی درخواست بھی کام نہ آئی جس کے بعد سپیکر کو مجبوراً پندرہ منٹ کا وقفہ کر نا پڑا ۔ جمعہ کو قومی اسمبلی میں پاکستان مسلم لیگ (ن)کے اراکین بازوﺅں پر سیاہ پٹیاں باندھ کر شریک ہوئے،قائد ایوان کے انتخاب کے دور ان رائے شماری کا عمل مکمل ہونے کے بعد سپیکر کی جانب سے اعلان کیا گیا کہ عمران خان 176ووٹ لیکر قائد ایوان منتخب ہوئے ہیں اور مسلم لیگ (ن)کے امیدوار شہباز شریف کو 96ووٹ ملے ۔ اس موقع پر مسلم لیگ (ن)کے متعدد اراکین نے پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کی نشست کا گھیراﺅ کرلیااور شدید نعرے بازی کی جبکہ پاکستان تحریک انصاف کے اراکین عمران خان کے گرد کھڑے ہوگئے اور لیگی اراکین کو احتجاج سے روکنے کی کوشش کی تاہم مسلم لیگ (ن)کے اراکین نے احتجاج جاری رکھا ،مسلم لیگ (ن)کے اراکین کی جانب سے جعلی مینڈیٹ نا منظور  ووٹ کو عزت دو ، نہ بکنے والا  نہ جھکنے والا نوازشریف کے نعرے لگائے گئے اور نعرے بازی کا سلسلہ نصف گھنٹے سے زائد دیر تک جاری رہا اس دوران پاکستان تحریک انصاف کے کارکنوں نے وزیر اعظم عمران خان، آئی آئی پی ٹی آئی کے نعرے لگائے ۔سپیکر قومی اسمبلی تمام صورتحال کے دور ان گیلری اور ایوان میں موجود لیگی اراکین کو روکنے کی کوشش کرتے رہے لیکن اپوزیشن اراکین نے ایک نہ سنی اور نعرے بازی جاری رکھی اس موقع پر قومی اسمبلی میں کان پڑی آواز سنائی نہیں دے رہی تھی ۔سپیکر اسد قیصر نے گیلری میں موجود لوگوں کو بھی نعرے بازی نہ کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے انتباہ کیا کہ نعرے لگانے والے مہمانوں کو گیلری سے نکال دیا جائےگا۔

 

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close