پاکستان

کلثوم نواز کی رسم قل ادا کی گئی،آصف زرداری، بلاول بھٹوکی رائیونڈ آمد

لاہور:سابق وزیر اعظم محمد نواز شریف کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز کی رسم قل رائے ونڈ میں ادا کی گئی جس میں شریف خاندان کے افراد، عزیز و اقارب، پارٹی کے مرکزی وصوبائی رہنماﺅں ، دیرینہ کارکنوں اور عوام نے شرکت کی ، ملک کے مختلف حصوں میں بھی مرحومہ کی روح کے ایصال ثواب کےلئے قرآن خوانی اورفاتحہ خوانی کی گئی ،غیر ملکی شخصیات ، آصف زرداری ، بلاول بھٹو ، چوہدری شجاعت حسین سمیت دیگر نے جاتی امراءرائے ونڈ میں نواز شریف اور شہباز شریف سے ملاقات کر کے بیگم کلثوم نواز کے انتقال پر اظہار تعزیت اور فاتحہ خوانی کی ۔ تفصیلات کے مطابق سابق وزیر اعظم محمد نواز شریف کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز کی روح کے ایصال ثواب کےلئے جاتی امراءرائے ونڈ میں رسم قل کا اہتمام کیا گیا جس میں نواز شریف ، شہباز شریف ، کیپٹن (ر) محمد صفدر، حمزہ شہباز، سلمان شہباز ، جنید صفدر سمیت خاندان کے دیگر افراد ، قریبی عزیز و اقارب ،پارٹی کے مرکزی رہنماﺅں اور دیگر شخصیات نے شرکت کی ۔
اس موقع پر خواتین کےلئے الگ انتظامات کئے گئے جس میں نواز شریف کی والدہ بیگم شمیم اختر، مریم نواز سمیت خاندان اورعزیز و اقارب خواتین نے شرکت کی ۔ شریف میڈیکل سٹی کی گراﺅنڈ میں بھی رسم قل ادا کی گئی جس میں پارٹی کے صوبائی رہنماﺅں ، سماجی شخصیات ، دیرینہ کارکنوں اور عام عوام نے شرکت کی ۔ دونوں مقامات پر قرآن خوانی کے بعد حمد و ثناءاور نعت خوانی کی گئی اور بعد ازاں عالمی مبلغ مولانا نعیم بٹ نے مرحومہ کی روح کے ایصال ثواب کےلئے اجتماعی دعا کرائی ۔ قبل ازیں سابق صدر آصف علی زرداری ، بلاول بھٹو اور چوہدری شجاعت حسین کی سربراہی میں پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ (ق) کے وفود نے سابق وزیراعظم محمد نواز شریف سے جاتی امراءرائے ونڈ میں ملاقات کر کے ان کی اہلیہ بیگم کلثوم نواز کے انتقال پر اظہار تعزیت اور فاتحہ خوانی کی ۔
پیپلز پارٹی کے وفد میں رضا ربانی ، فرحت اللہ بابر ،قمر زمان کائرہ ،شیریں رحمان، لطیف کھوسہ، رحمان ملک،مصطفی نواز کھوکھر،عزیز الرحمن چن موجود تھے جبکہ اس موقع پر محمد شہباز شریف اور دیگر بھی موجود تھے ۔آصف زرداری نے کہا کہ بیگم کلثوم نواز نڈر اور بہادر خاتون تھیں۔پورا ملک جمہوریت کےلئے انکی جد و جہد کو یاد کر رہا ہے اور کرتا رہے گا۔ انہوں نے کہا کہ بیگم کلثوم نواز کا انتقال شریف خاندان کے لیے بہت بڑا صدمہ ہے۔ہم بھی شریف خاندان اور مسلم لیگ (ن) کے دکھ میں برابر کے شریک ہیں ۔نواز شریف کا کہنا تھاکہ مجھے سب سے زیادہ تکلیف اس بات کی ہے کہ آخری وقت بیمار بیگم کے ساتھ نہیں گزار سکا ۔پیپلز پارٹی کی قیادت کا شکر گزار ہوں کہ انہوں نے تکلیف اور دکھ کی اس گھڑی میں ہمارا ساتھ دیا۔پیپلز پارٹی کا وفد نماز جنازہ میں بھی شریک ہوا اور آج بھی پارٹی کے پورے خاندان کے ہمراہ چل کر آئے جس کےلئے شکر گزار ہوں ۔
پاکستان مسلم لیگ (ق)کے صدر و سابق وزیراعظم چودھری شجاعت حسین نے مونس الٰہی، شافع حسین، سالک حسین اور راسخ الٰہی کے ہمراہ سابق وزیر اعظم محمد نوازشریف سے جاتی امرا میں ملاقات کر کے بیگم کلثوم نواز کے انتقال پر تعزیت اور فاتحہ خوانی کی۔ اس موقع پر میاں شہبازشریف اور دیگر رہنما بھی موجود تھے۔ چودھری شجاعت حسین نے میاں نوازشریف سے کہا کہ محترمہ کلثوم نواز نہایت مدبر اور سنجیدہ خاتون تھیں۔ انہوں نے مرحومہ کیلئے جنت الفردوس میں اعلیٰ مقام اور غمزدہ خاندان کیلئے صبر جمیل کی دعا کی۔ مسلم لیگی رہنماﺅں نے بیگم کلثوم نواز کی رسم قل میں بھی شرکت کی۔وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدرنے بھی وزیر اعظم نواز شریف سے ملاقات کر کے بیگم کلثوم نواز کے انتقال پر اظہار تعزیت اور فاتحہ خوانی کی ۔چینی قونصلیٹ کے جنرل قونصل کی قیادت میں وفد نے نواز شریف سے ملاقات کر کے ان کی اہلیہ کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کیا۔
سابق سپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز اصادق ، رانا تنویر حسین ، برجیس طاہر ، انجینئر خرم دستگیر ،(ن) لیگ لاہور کے صدر پرویز ملک ، مسلم لیگ (ن) سندھ کے صدر سید شاہ محمد شاہ، سندھ کے صوبائی وزیر زراعت محمد اسماعیل راہو، علی اکبر گجر سمیت دیگر نے بھی سابق وزیر اعظم محمد نواز شریف سے ملاقات کی اور بیگم کلثوم نواز کے انتقال پر اظہار تعزیت اور فاتحہ خوانی کی ۔ رہنماﺅں نے بیگم کلثوم نواز کی قبر پر بھی فاتحہ خوانی کی ا ور پھول چڑھائے ۔

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close